عمران خان ریاض کو لاہور سے دبئی پرواز کرنے سے روک دیا گیا

 امیگریشن ذرائع کے مطابق، سینئر صحافی عمران ریاض خان کو آج جمعہ کے روز لاہور سے دبئی جانے والی پرواز سے روک دیا گیا اور آف لوڈ کیا گیا۔ 

پولیس کی درخواست پر وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے) نے صحافی کا نام بلیک لسٹ میں ڈالا تھا۔

ایف آئی اے کے بارڈر کنٹرول ذرائع کے مطابق صحافی آج صبح بین الاقوامی کیریئر پر دبئی جا رہا تھا۔ 

سینئر پولیس حکام کو صحافی کو پرواز سے ہٹائے جانے اور ملک چھوڑنے کی کوشش کی اطلاع دی گئی تھی۔ 

‘سلو پوائزن’ 

دریں اثنا، صحافی نے ٹویٹر پر لاہور پولیس پر الزام لگایا کہ اس کی گرفتاری کے دوران اس کے کھانے میں نقصان دہ مادے شامل کیے گئے۔ 

صحافی عمران ریاض نے دبئی جانے کی ممکنہ وجہ بتاتے ہوئے کہا کہ میرے ڈاکٹروں کے مطابق، میری گرفتاری کے دوران مجھے کچھ ایسا کھانے کے لیے دیا گیا جو خطرناک ہو سکتا ہے۔ مجھے کچھ ٹیسٹ لینے ہوں گے تاکہ میں ثابت کر سکوں کہ کیا کھلایا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں | گوجرانوالہ کے علاقے سیٹلائٹ ٹاؤن میں وفاقی وزیر خرم دستگیر کے گھر میں بارش کا پانی داخل ہو گیا۔

یہ بھی پڑھیں | نارتھ وزیرستان میں پولیو کا بارہواں کیس سامنے آ گیا

  تاہم عمران ریاض نے بتایا کہ انہیں ایئرپورٹ پر روک دیا گیا ہے۔

 سابق وزیراعظم عمران خان نے عمران ریاض کی جانب سے لگائے گئے الزامات کے جواب میں قید صحافی کی ویڈیو شیئر کرتے ہوئے تبصرہ کیا کہ ’عمران ریاض کو پنجرے میں بند کیا گیا تھا، جہاں مہذب ممالک جانوروں کو بھی رکھنے کی اجازت نہیں دیتے‘۔

 سابق وزیر اعظم نے صحافی کے موقف کی حمایت کرتے ہوئے شبہ ظاہر کیا کہ موجودہ حکومت نے صحافی کو زہر دینے کے لیے ملی بھگت کی ہے۔

 عمران خان نے حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ تمام ذمہ داروں کو شرم آنی چاہیے۔ پاکستانی عوام کو خوفزدہ کرنے کے بجائے، اس سے بدمعاشوں اور ان کے ہینڈلرز کے خلاف لوگوں کے غصے میں اضافہ ہوتا ہے۔

 یاد رہے کہ 9 جون کو لاہور ہائی کورٹ نے عمران ریاض کی ضمانت منظور کرتے ہوئے انہیں اسلام آباد میں گرفتار کرنے کے بعد رہا کرنے کا حکم دیا تھا۔

یاد رہے کہ عمران ریاض کو اس حقیقت کے باوجود گرفتار کر لیا گیا کہ ایک عدالت نے انہیں قبل از گرفتاری ضمانت دے رکھی تھی۔ ان کی گرفتاری کی ممکنہ وجہ ان کی موجودہ حکومت اور فوج کے خلاف سخت تنقید تھی جو وہ سوشل میڈیا پر عمران خان کی حکومت گرنے کے بعد سے کرتے چلے آ رہے ہیں۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔

ہمارا نیوز لیٹر جوائن کریں
تازہ ترین آرٹیکلز، نوکریوں اور تفریحی خبریں ڈائریکٹ اپنے انباکس میں حاصل کریں
یہاں ایک لاکھ ستر ہزار سبسکرائبرز ہیں