طالب علم کی حیثیت سے پیسے کمانے کے 5 طریقے

دوران تعلیم پیسے کمائیں

آپ ایک طالب علم کی حیثیت سے بھی دوران تعلیم پیسے کما سکتے ہیں لیکن کیسے؟ آج ہم آپ کو ایسے ہی پیسہ کمانے کے 5 طریقے بتانے جا رہے ہیں۔ تو آئیے جانتے ہیں کہ ایک طالب علم کی حیثیت سے آپ کیسے پیسے کما سکتے ہیں۔

طالب علم کی حیثیت سے پیسے کمانے کے 5 طریقے

اول۔ آن لائن مواد پبلش کریں

 سوشل میڈیا یا دیگر آن لائن پلیٹ فارمز پر کامیاب ہونے کے لیے بہت زیادہ محنت اور لگن کی ضرورت ہوتی ہے۔ لیکن اگر آپ اس  کام  کے لئے تیار ہیں تو واقعی آپ کر سکتے ہیں۔ آن لائن مواد سے پیسہ کمانے کا ایک بہترین طریقہ یوٹیوب ویڈیوز بنانا بھی ہے۔ مستقل طور پر ایسی ویڈیوز بنائیں جو آپ کے ناظرین کے لیے اہمیت کی حامل ہوں۔ اس سے آپ کا چینل بڑھے گا اور لوگ آپ کے مواد کو شئیر کریں گے۔ ایک بار جب آپ کم از کم ایک ہزار سبسکرائبرز اور چار ہزار گھنٹے واچ ٹائم تک پہنچ جائیں گے تو آپ اپنی ویڈیوز میں اشتہارات سے پیسہ کمانا شروع کر سکتے ہیں۔

دوم۔ پہلے سے موجود چیزوں کو بیچیں

 کیوں نہ اپنے کمرے کے ارد گرد نظر ڈالیں اور دیکھیں کہ کیا کوئی ایسی چیز ہے جو آپ بیچ سکتے ہیں؟ ایک شخص کے لئے ردی کی ٹوکری دوسرے شخص کے لئے خزانہ ہو سکتا ہے اس لیے آپ کے پاس ایسی چیزیں ہونے کا امکان ہے جسے آپ اب استعمال نہیں کریں گے لیکن کوئی اور پسند کرے گا جیسا کہ کتابیں وغیرہ۔ اس طرح بھی آپ پیسہ کما سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں | باداموں کے آئل کے 5 زبردست فائدے جانئے

یہ بھی پڑھیں | سال 2023 کے پاکستانی برائیڈل میک اپ ٹرینڈز سے متعلق جانئے

 سوم۔ ٹیوشن پڑھانا

 اس کے ساتھ ساتھ جو مہارتیں آپ کے پاس پہلے سے موجود ہیں، کیوں نہ ان کو بیچا جائے۔ اسکول کی تعلیم اور کسی بھی غیر نصابی چیزوں سے متعلقہ آپ دوسرے لوگوں کو ٹیوشن پڑھا سکتے ہیں۔ بہت سے ایسے لوگ ہیں جن کے پاس وہ علم نہیں جو آپ رکھتے ہیں۔ یہ علم دوسروں کو سکھا کر آپ پیسے کما سکتے ہیں۔

چہارم۔ پارٹ ٹائم نوکری

 ایک طالب علم کی حیثیت سے پیسہ کمانے کا سب سے روایتی طریقہ بلکہ یونیورسٹی میں آمدنی کی ضمانت دینے کا سب سے یقینی طریقہ پارٹ ٹائم کسی آفس یا ریستوران میں نوکری کرنا ہے۔ اس کے لیے آپ مختلف مقامات پہ اپنی سی وی ڈراپ کر سکتے ہیں۔ 

پنجم۔ ڈیلیوری بوائے

 ایک ڈلیوری بوائے کی حیثیت سے پیسہ کمانے کے بارے میں کیا خیال ہے؟ اگر آپ کے پاس کار یا موٹر سائیکل ہے تو آپ ٹیک وے ڈیلیوری ایپس کے ساتھ کام کر سکتے ہیں۔ ایسی کمپنیز کو تقریبا ہر وقت ڈیلیوری بوائیز کی ضرورت ہوتی ہے۔

ثاقب شیخ

ثاقب شیخ فاؤنڈیشن فار ڈیفنس آف ڈیموکریسیز کے ایک ریسرچ فیلو ہیں، جو واشنگٹن میں قائم، قومی سلامتی اور خارجہ پالیسی پر توجہ مرکوز کرنے والا غیر جانبدارانہ تحقیقی ادارہ ہے۔