کیا حبیب بینک لمیٹڈ کے بینک اکاؤنٹس سے پیسے کم ہو رہے ہیں؟

 پاکستان  پاکستان

حبیب بینک لمیٹڈ پاکستان

کا سب سے بڑا بینک ہے جس کی 1,650 سے زیادہ شاخیں ہیں اور دنیا بھر میں 23 ملین سے زیادہ صارفین ہیں۔

حبیب بینک کو ایک بار پھر بری طرح سے دھچکا لگا ہے کیونکہ اس کے متعدد صارفین اپنے بینک اکاؤنٹ سے کچھ ہی دیر میں ہزاروں روپے کٹوتی کی شکایات درج کروا رہے ہیں۔

 ا تاہم، جب متاثرین کی جانب سے رابطہ کیا جاتا ہے، تو حبیب بینک لمیٹڈ کے نمائندے اپنے سسٹم میں خرابی یا سائبر حملے کا شکار ہونے سے بالکل غافل دکھائی دیتے ہیں۔ 

 حبیب بینک اکاؤنٹس سے مشکوک ٹرانزیکشنز کے واقعے کے بعد، فیس بک پیج ‘وائس آف کسٹمر’ پوسٹس سے بھر گیا جس میں لوگوں نے اس معاملے پر اپنی ناراضگی اور غصے کا اظہار کیا۔

یہ بھی پڑھیں | چین نے امریکہ کو پیچھے چھوڑ دیا؛ امیر ترین ملک بن گیا   

 متاثرین میں سے ایک صارف نے ‘وائس آف کسٹمر’ پیج پر لکھا کہ مجھے نومبر سے شروع ہونے والی ڈپلیکیٹ ٹرانزیکشن سے رقم ملی۔ ای میل اور کال پر اس کی اطلاع دی، لیکن انہوں نے کہا کہ ان کے سسٹم میں کچھ بھی غلط نہیں ہے۔ آج انہوں نے بغیر کسی معذرت یا وضاحت کے جزوی رقم کاٹ لی ہے۔ 

حبیب بینک کو عوامی بیان دینا چاہیے کہ ان کے آن لائن آپریشنز اور ڈیٹا سے سمجھوتہ کیا گیا ہے۔ 

 سعد علی نے لکھا کہ میری والدہ کے ساتھ بھی ایسا ہوا، روزانہ 2 سے 300 روپے کاٹے جاتے ہیں اور جب ہم نے سٹیٹمنٹ چیک کیا تو تقریباً 10 ہزار کاٹے جا چکے ہیں۔

  ملک گل زیب عمر نے لکھا کہ یہ سب ڈپلیکیٹ ٹرانزیکشنز ریورسل ہیں۔ میرے اپنے اکاؤنٹ میں 2-3 نومبر کو ڈپلیکیٹ لین دین ہوا ہے اور آج وہ بات ختم کر رہے ہیں۔ بہت سے لوگ جو شکایت کر رہے ہیں وہ براہ کرم اپنے بیانات کو کراس کر سکتے ہیں یا پھر ہیلپ لائن کو کال کر سکتے ہیں کہ کون سی تنسیکشن ڈپلیکیٹ ہوئی تھی، سارا سیشن دیکھا دیں گے کوئی مسئلہ نہیں ہے۔ 

 تاہم، چند پوسٹوں میں شکریہ ادا کیا گیا کہ وہ رقم کھو چکے تھے لیکن بعد میں شکایت پر مسئلہ حل کر دیا گیا۔

  سدرہ عثمان نے لکھا کہ 10000 روپے کا ٹرانزیکشن ہوا لیکن ے ایک ہفتے کے اندر ٹھیک ہو گیا۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔

cropped-urdu_khabar_logo.png

ہمارے نیوز لیٹر میں شامل ہوں۔

تازہ ترین مضامین، نوکریاں، مفت، تفریحی خبریں براہ راست اپنے ان باکس میں حاصل کریں۔

170000 سبسکرائبرز یہاں ہیں۔