مصنف کے بارے میں

صفحۂ اول

کنٹاس ایئر ویز کا آسٹریلیا میں خفیہ مقامات کے لئے پروازیں چلانے کا اعلان

کنٹاس ایئر ویز نے آسٹریلیا میں خفیہ مقامات کے لئے ‘پراسرار پروازیں’ چلانے کا اعلان کیا ہے جس میں مسافروں کو یہ بھی نہیں بتایا جائے گا کہ وہ کہاں جا رہے ہیں۔ 

ایک دلچسپ پیش کش میں ، آسٹریلیائی ایئر لائنز ، کنٹاس ایئر ویز نے بوئنگ کے تین طیاروں میں سے کسی ایک نامعلوم مقامات پر پروازیں بک کرنا شروع کر دی ہیں جہاں مسافروں کو معلوم نہیں ہوگا کہ طیارے میں اترنے تک وہ کہاں جارہے ہیں یا جب تک اعلان نہیں ہوجاتا۔

 تفصیلات کے مطابق مسافروں سے اکانومی کلاس کے لئے 577 آسٹریلیائی ڈالر یا بزنس کلاس ٹکٹ کے لئے 1،579 آسٹریلیائی ڈالر وصول کیے جائیں گے۔

یہ بھی پڑھیں | کراچی میں پراپرٹی کی قیمتیں آسمان کو چھونے لگیں

  ایئر لائنز کے مطابق ، ایک روزہ دوروں پر صرف 120 مسافروں کی اجازت ہوگی۔ اس نے مزید کہا کہ پہلی بار اس نے “پراسرار پروازوں” کی پیش کش 1990 کی دہائی میں کی تھی۔ آسٹریلیائی پرچم بردار جہاز نے اس سے پہلے کہیں بھی سات گھنٹے کی پرواز شروع کی تھی۔

 یہ ٹکٹیں صرف 10 منٹ میں فروخت ہو گئیں۔ مسافروں کو خفیہ علاقے کی تلاش کرنے کے بعد وہی ہوائی اڈے پر واپس روانہ کیا جائے گا جہاں وہ اترے ہیں۔ 

 کنٹاس گروپ کے چیف کسٹمر آفیسر اسٹیفنی ٹولی نے سی این این کو بتایا کہ پراسرار پروازوں کا مقصد خاص طور پر علاقے میں سیاحت کے آپریٹرز کی مدد کرنا ہے ، جو خاص طور پر سفری پابندیوں کی متعدد لہروں سے متاثر ہوئے ہیں۔

 اس کے علاوہ ہمارے زیادہ سے زیادہ لوگوں کو کام پر واپس لانے میں مدد کریں گے۔ 

اپنے ٹویٹر پیغام میں ، ایئر لائن نے اعلان کیا کہ پرواز کہیں نہیں؟‘ پرواز کہاں جائے گی؟  ہم سرحدی بلیوز کا مقابلہ کرنے کے لئے آسٹریلیا میں تین پراسرار پروازیں چلارہے ہیں۔ جمعرات 4 مارچ کو نشستیں فروخت ہورہی ہیں۔ 

 تمام مسافروں کو بکنگ اور ہوائی اڈے پر جانے کی ضرورت ہے۔ ایک میڈیا بیان میں کہا گیا ہے کہ تمام مقامات بڑے دارالحکومت کے شہروں سے باہر ہیں۔ اس سے قبل منگل کے روز ، آسٹریلیائی حکومت نے اعلان کیا تھا کہ اس ملک کی بین الاقوامی سفری پابندی کو تین ماہ میں بڑھا کر 17 جون تک کردیا جائے گا۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔