کراچی کی چار سالہ لڑکی مائکروسافٹ پروفیشنل بن گئی

کراچی سے تعلق رکھنے والی 4 سالہ اریش فاطمہ نے مائیکرو سافٹ کے سب سے کم عمر پروفیشنل بن کر تاریخ رقم کر دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق چار سال کی عمر میں ، اریش فاطمہ نے مائیکرو سافٹ سرٹیفائیڈ پروفیشنل (ایم سی پی) امتحان میں 831 نمبر حاصل کرکے ایک انوکھی مثال قائم کردی ہے۔

اس بات کا اعلان حکومت پاکستان نے جمعہ کو ٹویٹر کے ذریعے کیا۔ 

یہ بھی پڑھیں | چائنہ کے سفیر کا کوئٹہ میں مصروف دن

نجی ٹی وی کے مطابق ، ایم سی پی کے امتحان میں کامیاب ہونے کے لئے کم سے کم اسکور 700 ہے جبکہ آریش نے بڑی کامیابی حاصل کرنے کے لئے عالمی ریکارڈ توڑ دیا اور پاکستان کا نام دنیا بھر میں روشن کیا۔ 

اریش فاطمہ کے والد ، جنہوں نے بہت کم عمری میں یہ سنگ میل بھی پورا کیا تھا ، نے بتایا کہ کورونا وائرس لاک ڈاؤن کے دوران گھر سے کام کرتے ہوئے انہوں نے اپنی بیٹی کی آئی ٹی میں دلچسپی دیکھی اور اس ٹیسٹ میں ان کی مدد کی۔ 

اریش کے والد اسامہ بھی آئی ٹی ماہر ہیں اور اپنی بیٹی کو اس شعبے میں حیرت کا مظاہرہ کرتے ہوئے دیکھتے ہیں۔

 ایریش کے والدین کا کہنا ہے کہ ان کی بیٹی “انتہائی قابل ہے اور اس میں غیر معمولی صلاحیتیں ہیں۔

سوشل میڈیا پر مختلف لوگ پاکستانی بیٹی اریش کی اس صلاحیت کی تعریف کر رہے ہیں۔

جاویریہ حارث

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔

سبسکرائب
کو مطلع کریں
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments
0
آپ اس متعلق کیا کہتے ہیں؟ اپنی رائے کمنٹ کریںx
()
x