وزیر اعظم نے ڈریم نالج سٹی کے پلان سے آگاہ کر دیا

وزیر اعظم عمران خان نے پیر کے روز نمل یونیورسٹی میں دریم نالج سٹی کا ماسٹر پلان شیئر کیا جس کی بڑی تعمیر 2027 تک ختم ہونے کی امید ہے۔

ٹویٹر پر ایک ویڈیو شیئر کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا کہ پاکستان کا پہلا نالج سٹی تعمیر کرنا ان کا خواب تھا۔

اس سے قبل ہفتے کے روز وزیر اعظم عمران خان نے نمل یونیورسٹی ، جو میانوالی میں واقع ہے ، میں قائم ہونے والے ‘نالج سٹی’ منصوبے کے پہلے مرحلے کا آغاز کیا تھا۔

تفصیلات کے مطابق پہلا مرحلہ 2023 تک مکمل ہوگا جس میں 800 طلباء اور 50 فیکلٹی ممبران شامل ہوں گے جبکہ شہر پر تعمیراتی کام کا بڑا مرحلہ 2027 تک مکمل ہونے کی امید ہے۔

اس نالج سٹی میں تعلیمی بلاکس ، لائبریریوں ، ٹکنالوجی پارکس ، کاروباری مراکز ، ڈیری فارمز ، پرائمری اور سیکنڈری اسکولوں ، کھیلوں کی سہولیات ، ایک اسپتال ، شاپنگ سینٹرز ، ہوٹلوں اور عملے ، اساتذہ اور طلباء کے لئے رہائش گاہ کالونی شامل ہونے کی امید ہے۔ 

ایک اور ویڈیو جو 2005 میں وزیر اعظم نے اپنے انسٹاگرام اکاؤنٹ پر شیئر کی تھی اس میں وزیر اعظم عمران خان پس منظر میں نمل کالج کی عمارت کی طرف اشارہ کرتے ہوئے اور یہ بتاتے ہوئے دکھائی دیتے ہیں کہ جب انہوں نے اس صحرا کو دیکھا تو انہوں ایک علمی شہر کا تصور کیا۔

انہوں نے بتایا کہ آکسفورڈ یونیورسٹی جیسے علمی شہر جہاں میں گیا تھا اور جس نے مجھے متاثر کیا۔ انہوں نے اس وڈیو میں بتایا کہ یہ ویران زمین میلوں تک پھیلی ہوئی ہے جہاں مجھے امید ہے کہ میڈیکل اسکول ہوں گے ، انجینئرنگ اسکول ہوں گے ، ٹیکسٹائل اسکول ہوں گے۔

 یہ  پاکستان میں تعلیم کا مرکز اور ایک خوبصورت ماحول بنے گا جہاں آپ کے پاس ایک جھیل ہو گی اور پھر یہاں قدیم تاریخی مقام بھی ہیں۔

شئر کریں

جاویریہ حارث

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *