نواز شریف کی والدہ کا انتقال، نوازشریف لندن میں ہی آخری رسومات ادا کریں گے

سابق وزیر اعظم نواز شریف کی والدہ کا اتوار کے روز لندن میں انتقال ہوگیا ہے۔ 

 پارٹی ذرائع کے مطابق وہ ایک ماہ یا اس سے زائد عرصے سے بیمار تھیں۔زرائع کے مطابق وہ پچھلے ہفتے دو بار لندن کے ایک اسپتال میں چیک اپ کے لئے گئیں۔ 

 مسلم لیگ (ن) پنجاب کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل عطا اللہ تارڑ نے بتایا کہ امکان ہے کہ ان کی میت کو چند ہی دن میں واپس لایا جائے گا اور  جاتی عمرا میں ان کے شوہر میاں شریف کی قبر کے پاس دفن کیا جائے۔

 بیگم شمیم اختر نے فروری میں اپنے ڈاکٹروں کے مشورے کے خلاف اپنے بیمار بیٹے نواز شریف کو دیکھنے کے لئے برطانیہ کا سفر کیا جو وہاں دل اور گردے کی بیماریوں میں زیر علاج ہیں۔ عطا اللہ تارڑ نے کہا کہ نواز شریف کے چھوٹے بھائی اور مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف کی رہائی کے لئے متعلقہ حکام سے باضابطہ طور پر رابطہ کیا جارہا ہے۔ 

پنجاب کے وزیر جیل خانہ فیاض چوہان کا کہنا ہے کہ شہباز شریف اور اس کے بیٹے حمزہ شہباز دونوں کوٹ لکھپت جیل میں ہیں جن کو لاش کی آمد سے ایک روز قبل پیرول پر رہا کیا جائے گا۔

 اس دوران ، سابق وزیر اعظم کے داماد ، ریٹائرڈ کیپٹن صفدر جاتی عمرہ میں تدفین کے انتظامات کر رہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں | مودی کے الزامات پر چائنہ کی جانب سے پاکستان کی حمایت

 عطا اللہ تارڑ نے کوٹ لکھپت جیل میں شہباز شریف سے ملاقات کی اور تدفین کے منصوبے پر تبادلہ خیال کرنے کے لئے  نواز شریف کے ساتھ ٹیلیفونک رابطہ کا اہتمام کیا۔

پارٹی کے ایک عہدیدار نے بتایا کہ نواز شریف لندن میں اپنی والدہ کی آخری رسومات میں شرکت کریں گے  کیونکہ ان کے فیملی ڈاکٹر نے بھی انہیں فضائی سفر کرنے سے منع کیا ہے۔

 دریں اثنا ، مسلم لیگ (ن) نے اپنی تمام پارٹی سرگرمیاں معطل کر دی ہیں اور بہاولپور اور مظفر گڑھ میں 24 نومبر کو ہونے والے کارکنوں کے کنونشن ملتوی کردیئے ہیں۔

  وزیر اعظم عمران خان ، چیف آف آرمی اسٹاف (سی او ایس) جنرل قمر جاوید باجوہ ، سابق صدر آصف زرداری ، لیفٹیننٹ (ریٹائرڈ) عاصم سلیم باجوہ ، پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری ، جے یو آئی (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمن ، اے این پی صدر اسفند یار ولی ، مسلم لیگ ق کے رہنما شجاعت حسین ، تحریک استقلال کے رحمت خان وردگ ، مختلف وفاقی وزراء اور دیگر نے ان کی وفات پر شریف خاندان سے اظہار تعزیت کیا ہے۔

جاویریہ حارث

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔

سبسکرائب
کو مطلع کریں
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments
0
آپ اس متعلق کیا کہتے ہیں؟ اپنی رائے کمنٹ کریںx
()
x