عمران خان کا براہ راست  تقریر پر ہابندی کے خلاف اسلام آباد ہائی کورٹ سے رجوع

سیلاب متاثرین کے لیے بین الاقوامی ٹیلی تھون

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) نے سابق وزیر اعظم عمران خان کے سیلاب متاثرین کے لیے بین الاقوامی ٹیلی تھون کی براہ راست نشریات کے لیے اسلام آباد ہائی کورٹ (آئی ایچ سی) سے رجوع کیا ہے۔

 گزشتہ ہفتے پاکستان الیکٹرانک میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی (پیمرا) نے پولیس اہلکاروں اور خاتون جج کے خلاف متنازعہ ریمارکس پر پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان کی تمام سیٹلائٹ ٹی وی چینلز پر لائیو تقاریر نشر کرنے پر پابندی عائد کر دی تھی۔ 

تفصیلات کے مطابق پی ٹی آئی آج اسلام آباد ہائی کورٹ میں درخواست دائر کی جس پر فیصلہ سناتے ہوئے جج نے پیمرا کی جانب سے لگائی گئی پابندی کو ختم کر دیا ہے۔

یاد رہے کہ عمران سیلاب متاثرین کی مدد کے لیے آج رات 9.30 سے ​​12 بجے (مقامی وقت) تک بین الاقوامی ٹیلی تھون کا انعقاد کریں گے۔ 

 تفصیلات کے مطابق پنجاب اور خیبرپختونخوا کے وزرائے اعلیٰ بھی ان کے ہمراہ ہوں گے۔

 پی ٹی آئی کے آفیشل ٹوئٹر ہینڈل پر شیئر کیے گئے ایک ویڈیو پیغام میں عمران خان نے بیرون ملک مقیم پاکستانیوں سمیت لوگوں سے اپیل کی کہ وہ پیر کو ہونے والی ٹیلی تھون میں شرکت کریں اور جو بھی ہو سکے عطیہ کریں۔

یہ بھی پڑھیں | شہباز گل معافی مانگنے کے لئے تیار ہے، وکیل

یہ بھی پڑھیں | اسلام آباد ہائی کورٹ نے پی ڈی ایم لیڈرز کے خلاف درخواست خارج کر دی

 جولائی سے پاکستان ایک انسانی بحران کا شکار ہے۔ مہلک سیلاب نے ملک کو تباہ کر دیا ہے، جس سے اس کی 15 فیصد آبادی متاثر ہوئی ہے۔ 

 سرکاری اعداد و شمار کے مطابق، آج تک، 1,000 سے زیادہ لوگ اپنی جانیں گنوا چکے ہیں، جب کہ 14 جون سے بارشوں اور سیلاب سے 1,527 زخمی ہو چکے ہیں۔ 

 یہ اعداد و شمار اس بات کی درست تصویر نہیں دیتے کہ کتنی خواتین ہلاک، زخمی اور بے گھر ہوئیں۔ مزید یہ کہ مین اسٹریم میڈیا اور سوشل میڈیا سے خواتین اور لڑکیوں کی کوریج غائب ہے۔ جبکہ خواتین پاکستان کی آبادی کا تقریباً 48.5 فیصد بنتی ہیں۔ 

 پاکستان بھر سے 14 جون کے مجموعی اعداد و شمار سے پتہ چلتا ہے کہ 3,451.5 کلومیٹر سڑک کو نقصان پہنچا ہے اور 149 پل گر گئے ہیں، 170 دکانیں تباہ ہو گئی ہیں۔ 

 مزید برآں، کل 949,858 مکانات جزوی یا مکمل طور پر تباہ ہو چکے ہیں۔ کل میں سے 6,62,446 مکانات کو جزوی نقصان پہنچا ہے اور 287,412 مکمل طور پر تباہ ہو چکے ہیں۔ جبکہ 7,19,558 مویشی بھی ہلاک ہو چکے ہیں۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔