شیخ رشید نے ملکی حالات سے متعلق خطرے کی گھنٹی بجا دی

ملک کی موجودہ سیاسی صورتحال پر اپنے تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے وزیر داخلہ شیخ رشید احمد نے کہا کہ وہ ایک سیاسی حادثہ ہوتے دیکھ رہے ہیں اور خبردار کیا کہ ریاستی ادارے زیادہ دیر تک غیر جانبدار نہیں رہ سکتے۔ 

نجی نیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے شیخ رشید نے ملک میں جاری سیاسی صورتحال کو تشویشناک قرار دیتے ہوئے خبردار کیا کہ اس کا نتیجہ کچھ بھی نکل سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ ایک نہ ختم ہونے والی لڑائی ہے اور اس کے نتائج بھیانک ہو سکتے ہیں۔ 

 ایک سوال کے جواب میں وزیر داخلہ نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان نے تحریک عدم اعتماد پر ووٹنگ کے نتائج کا سامنا کرنے کے لیے خود کو ذہنی اور سیاسی طور پر تیار کر لیا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اسپیکر اور قانونی ماہر جانتے تھے کہ ایوان میں ووٹنگ کب ہوگی۔ 

 بڑھتے ہوئے سیاسی درجہ حرارت کے پیش نظر وزیر داخلہ نے کہا کہ جاری بحران کی وجہ سے سیاسی سیٹ اپ لپیٹا جا سکتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں | فرح خان نے خود پر لگے الزامات کی تردید کر دی   

 نئے انتخابات کو ملک میں جاری سیاسی بحران کا واحد حل قرار دیتے ہوئے شیخ رشید نے کہا کہ اپوزیشن کو بھی نئے اور شفاف عام انتخابات کی طرف بڑھنا چاہیے۔

ایک اور سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ‘قوم کو اپنا جائزہ لینا ہو گا کہ جن پر [کرپشن] کیسز میں فرد جرم عائد کی جانی تھی وہ وزیر اعظم اور وزیر اعلیٰ بن گئے۔ 

 انہوں نے کہا کہ ریاستی ادارے غیر جانبدار ہیں اور غیر جانبدار رہنا چاہتے ہیں لیکن جب بات ملکی سالمیت کی ہو تو کوئی بھی غیر جانبدار نہیں رہ سکتا۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔

ہمارا نیوز لیٹر جوائن کریں
تازہ ترین آرٹیکلز، نوکریوں اور تفریحی خبریں ڈائریکٹ اپنے انباکس میں حاصل کریں
یہاں ایک لاکھ ستر ہزار سبسکرائبرز ہیں