رانا ثناء اللہ ایم کیو ایم لیڈر شپ سے آج ملاقات کریں گے

ایم کیو ایم وفد سے رانا ثناء اللہ کی ملاقات

متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کے رہنماؤں کی جانب سے اپنے لاپتہ کارکنوں کی تین مسخ شدہ لاشوں کی برآمدگی کے حوالے سے حالیہ بیانات کے بعد وزیر داخلہ رانا ثناء اللہ پاکستان مسلم لیگ نواز (پی ایم ایل این) کے رہنماؤں کے وفد کے ہمراہ آج ایم کیو ایم سے ملاقات کریں گے۔ 

 ایم کیو ایم پی کے ترجمان کے مطابق وزیر داخلہ لاپتہ افراد کے اہل خانہ سے بھی ملاقات کریں گے اور اس بات پر تبادلہ خیال کریں گے کہ وفاقی حکومت نے ہلاکتوں کی تحقیقات کے لیے کیا اقدامات کیے ہیں۔ مسلم لیگ ن کے وفد میں رانا ثناء اللہ، ایاز صادق اور پارٹی کی مقامی قیادت بھی شامل ہوگی۔

یہ بھی پڑھیں |  الیکشن کمیشن کی خیبر پختونخواہ میں ضمنی الیکشن ملتوی کرنے کی دھمکی

یہ بھی پڑھیں |  لندن: شہباز شریف کی اپنے بھائی نواز شریف سے سیاسی موضوعات پر گفتگو

امن و امان کی صورتحال پر بات ہو گی

 اجلاس میں ایم کیو ایم پی کے رہنما وزیر داخلہ سے پوچھیں گے کہ لاپتہ کارکنوں کے قاتلوں کی شناخت میں وفاقی حکومت نے کیا پیش رفت کی ہے۔ ایم کیو ایم پی دیگر مسائل خصوصاً شہر میں امن و امان کی صورتحال پر بھی بات کرے گی۔ 

 گزشتہ ہفتے ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی نے پارٹی کے لاپتہ کارکنوں کے معاملے پر مرکز میں حکمران اتحاد سے علیحدگی کا انتباہ دیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ ایم کیو ایم وفاقی حکومت کی اہم شراکت دار ہے اور اگر پارٹی نے اتحاد چھوڑنے کا فیصلہ کیا تو مرکز میں مسلم لیگ ن کی حکومت گر جائے گی۔ 

وزیر داخلہ اس معاملے پر وزیراعلیٰ سندھ سے بھی ملاقات کریں گے۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔