مصنف کے بارے میں

صفحۂ اول

اسلام آباد میں قائد اعظم کی یادگار کے سامنے برہنہ فوٹوشوٹ کرنے والے افراد کے خلاف مقدمہ درج

نجی نیوز کی رپورٹ کے مطابق پولیس نے قائداعظم کی یادگار کے سامنے فحش فوٹو شوٹ کرنے والے افراد کے حوالے سے مقدمہ درج کیا ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق کورل پولیس نے ایک شہری کی شکایت پر پاکستان پینل کوڈ (پی پی سی) کی دفعہ 294 کے تحت ایف آئی آر درج کی جو کہ عوامی سطح پر فحش حرکتوں سے متعلق ہے۔

شکایت کنندہ کے مطابق ، کورل چوک پر قائداعظم کی تصویر کے سامنے آدھی برہنہ لڑکی اور لڑکے کی تصاویر سے قائد اعظم کی توہین ہوئی۔ انہوں نے کہا کہ سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی تصاویر سے لوگوں میں غصہ سامنے آیا ہے اور لوگوں نے اس ایکٹ پر قانونی کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔ 

یہ بھی پڑھیں | بیوی کے مقابلے میں حسین کی حالت زیادہ ہونی چاہیے ، صداف کنول کے بیان پر مختلف تبصرے

اسلام آباد کے ڈپٹی کمشنر محمد حمزہ شفقت نے ایک ٹویٹ میں اس حوالے سے معلومات مانگی ہیں۔ انہوں نے ٹویٹ کیا کہ کوئی بھی شخص جس کے پاس اس متعلق کوئی بھی معلومات ہو پلیز شیئر کر سکتا ہے۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔