پی ٹی آئی لانگ مارچ: اسلام آباد جانے والے راستے بند کئے جانے کا امکان

پچیس مئی کو پی ٹی آئی لانگ مارچ کی وجہ سے وفاقی دارالحکومت کی طرف ملک بھر سے جانے والے راستے بند کئے جانے کا امکان ہے۔

 کیپیٹل پولیس کے افسران نے بتایا کہ حکومت کی ہدایت پر دو منصوبے بنائے گئے تھے: یا تو پی ٹی آئی کے مارچ کرنے والوں کو دارالحکومت میں داخل ہونے کی اجازت دینا یا پھر داخلی مقامات پر انہیں روکنا۔ 

 تاہم ابھی تک کوئی حتمی فیصلہ نہیں ہوا ہے۔ لیکن دونوں صورتوں میں، ریڈ زون کو سیل کر دیا جائے گا سوائے مارگلہ روڈ پر اکیلے داخلے/ایگزٹ پوائنٹ کے۔

 عہدیداروں نے کہا کہ اگر حکومت پی ٹی آئی کو دارالحکومت میں داخل ہونے کی اجازت دیتی ہے تو پلان ‘اے’ نافذ کیا جائے گا لیکن اس صورت میں مارچ کرنے والوں کو زیرو پوائنٹ عبور کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

فیض آباد، بہارہ کہو، روات اور گولڑہ کو کنٹینرز لگا کر سیل کیا جائے گا اور پولیس کی تعیناتی ہوگی۔

حکومت نے پی ٹی آئی کو دارالحکومت میں داخلے کی اجازت نہ دی تو پلان بی پر عملدرآمد کیا جائے گا۔ اس پلان کے تحت تمام داخلی راستوں کو سیل کر دیا جائے گا اور مارچ کرنے والوں کو اٹک اور جہلم پلوں پر روکا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں | بنی گالہ: پولیس کی بھاری نفری عمران خان کے گھر پہنچ گئی

 اس کے علاوہ موٹرویز اور جی ٹی۔ روڈ بلاک کر کے پی ٹی آئی کے مقامی رہنماؤں، کٹر کارکنوں اور کارکنوں کو گرفتار کیا جائے گا۔ 

افسران نے بتایا کہ اس سلسلے میں 400 سے زائد مقامی رہنماؤں، کارکنوں اور کارکنوں پر مشتمل ایک فہرست تیار کی گئی ہے۔ جب بھی حکومت کی طرف سے ہدایت جاری کی جائے گی ان کی گرفتاری شروع ہو جائے گی۔ 

 مزید یہ کہ ایسے مقامات کی نشاندہی کی گئی ہے جہاں پی ٹی آئی اور اس کے طلبہ ونگ کے کارکن ملک کے دیگر حصوں سے دارالحکومت پہنچنے سے پہلے چھپے ہوئے ہیں۔ 

  افسران نے بتایا کہ عمران خان کو گزشتہ جمعہ کی رات گرفتار کرنے کا منصوبہ بنایا گیا تھا لیکن وہ ناکام رہا۔ پی ٹی آئی کے چیئرمین اس روز ایک عوامی اجتماع کے سلسلے میں ملتان میں تھے۔ ان کا کہنا تھا کہ دارالحکومت پولیس کی اچھی طرح سے لیس دستہ اسے گرفتار کرنے کے لیے بنی گالا گئی تھی تاہم، پولیس کا منصوبہ پی ٹی آئی کی قیادت کو لیک کر دیا گیا جس کے بعد عمران خان دارالحکومت واپس نہیں آئے۔ 

اس کے بعد کیپٹل پولیس چیف اور ایس ایس پی آپریشنز کو ان کے عہدوں سے ہٹا دیا گیا۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔

ہمارا نیوز لیٹر جوائن کریں
تازہ ترین آرٹیکلز، نوکریوں اور تفریحی خبریں ڈائریکٹ اپنے انباکس میں حاصل کریں
یہاں ایک لاکھ ستر ہزار سبسکرائبرز ہیں