مصنف کے بارے میں

صفحۂ اول

پی ٹی آئی صرف نواز شریف کے منصوبوں پر اپنی پلیٹس لگوا رہی ہے، محمد زبیر

 کراچی کراچی

ن لیگی رہنماؤں نے کہا کہ کہ وہ وزیراعظم عمران خان کے ان اقدامات کو بے نقاب کریں گے جو ان منصوبوں کا ’کریڈٹ‘ لیتے ہیں جو اصل میں سابق وزیر اعظم نواز شریف نے اپنے دور میں شروع کیے تھے۔ 

تفصیلات کے مطابق پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور سابق گورنر سندھ محمد زبیر نے کراچی سرکلر ریلوے کے سنگ بنیاد اور گرین لائن بس سروس کے آئندہ آغاز کے موقع پر پی ٹی آئی حکومت کو تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ یہ منصوبے درحقیقت کراچی اور اس کے لوگوں کے لیے نواز شریف کے ‘وژن’ کا نتیجہ تھے۔ 

یہ بھی پڑھیں | وکٹم ، ٹک ٹکر ، ایف آئی آر میں غلط گھر کا ایڈریس لکھیں

انہوں نے کہا کہ جب ہم نے 2018 میں حکومت چھوڑی  تو گرین لائن کا 80 فیصد انفراسٹرکچر پہلے ہی مکمل ہو چکا تھا۔

انہوں نے سوال کیا کہ پی ٹی آئی حکومت نے پچھلے تین سالوں میں کیا کیا ہے؟ میں آپ کو بتاتا ہوں۔ وہ صرف 40 بسیں لائے ہیں۔ کے سی آر پہلے ہی سی پیک [چین پاکستان اقتصادی راہداری] کا حصہ ہے جس پر مسلم لیگ (ن) کی حکومت نے دستخط کیے تھے۔  پی ٹی آئی صرف مسلم لیگ (ن) کی حکومت کے شروع کردہ منصوبوں پر پلیٹیں لگا رہی ہے۔ 

انہوں نے وفاقی حکومت کی فنڈنگ ​​کے تحت کراچی کے لیے منظور شدہ ، لانچ اور موصول ہونے والے منصوبوں سے متعلق بتایا جب نواز شریف وزیراعظم تھے۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے پورٹ قاسم پر 660 میگاواٹ بجلی کی فراہمی کا منصوبہ مکمل کیا۔ پھر ہم سسٹم میں ایک اور 1،100 میگاواٹ لائے۔ صنعتی زونوں کی ترقی اور موجودہ صنعتی اسٹیٹس کی تجدید کو وفاقی بجٹ کا حصہ بنایا گیا تھا۔ 

محمد زبیر نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) کی حکومت کی سب سے اہم اور قابل اعتماد کامیابی کراچی میں امن کی بحالی تھی اور انہوں نے مزید کہا کہ 2013 میں اقتدار سنبھالتے وقت نواز شریف نے جن چیلنجوں کا سامنا کیا وہ بہت بڑے تھے۔ 

انہوں نے کہا کہ ہم سب جانتے ہیں کہ پی ٹی آئی کا اولین ایجنڈا ملک میں ایک کروڑ نوکریاں پیدا کرنا اور پچاس لاکھ گھر بنانا تھا۔ لیکن کیا کیا ایسا کچھ ہوا؟ 

 حکومت کے تین سال گزرنے کے باوجود یہ وعدے ابھی تک پورے نہیں ہوئے۔ 

انہوں نے کہا کہ ریاستی ادارے رپورٹ کر رہے ہیں کہ بے روزگاری بڑھ رہی ہے اور اب زیادہ لوگ خط غربت سے نیچے جا رہے ہیں۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔