مصنف کے بارے میں

صفحۂ اول

پی سی بی زمبابوے ٹیسٹ کو پی سی ایل کے لئے موخر کر سکتی ہے

امکان ہے کہ پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) زمبابوے کے خلاف دو میچوں کی ٹیسٹ سیریز کا شیڈول موخر کرے گا تاکہ اس مدت میں پی ایس ایل سیزن چھ کے بقیہ میچز  کی میزبانی کی جاسکے۔

 ذرائع کے مطابق ، پی سی بی آنے والے جنوبی افریقہ اور زمبابوے کے دورے کے لئے صرف وائٹ بال اسکواڈ بھیجنے پر غور کر رہا ہے۔

 پاکستان کو پروٹیز کے خلاف تین ون ڈے اور چار ٹی ٹونٹی اور زمبابوے کے خلاف دو ٹیسٹ اور تین ٹی ٹونٹی میچ کھیلنا ہے۔ تاہم ، مؤخر الذکر کے خلاف ریڈ بال مقابلہ بعد کے وقت میں دوبارہ ترتیب دیا جا رہا ہے۔ 

پی سی بی کے ایک ذرائع نے نمائندے کو بتایا کہ اگرچہ بین الاقوامی دوروں کو ایڈجسٹ کرنا ہمیشہ مشکل ہے ، لیکن پھر بھی پی سی بی کو انڈین پریمیر لیگ شروع ہونے سے پہلے پی ایس ایل کے بقیہ میچوں کے انعقاد کے لئے کچھ ایڈجسٹمنٹ کرنے کی کوششیں جاری ہیں۔

یہ بھی پڑھیں | پی ایس ایل 2021 کے باقی میچز لاہور میں ہوں گے، رپورٹ

انہوں نے مزید کہا کہ اس سلسلے میں زمبابوے کرکٹ (زیڈ سی) کے ساتھ بات چیت جاری ہے۔ 

عہدیدار نے بتایا کہ دونوں ممالک کا وائٹ بال کرکٹ کا دورہ ممکن ہے کیونکہ اسکواڈ مقررہ تاریخوں پر جنوبی افریقہ میں ون ڈے اور ٹی ٹونٹی کھیل کھیلنے اور اس کے بعد زمبابوے میں محدود اوورز کی سیریز کھیلنا ہے۔

 ٹیسٹ سیریز کو بعد کی کچھ تاریخوں کے لئے بھی ایڈجسٹ کیا جاسکتا ہے بشرطیکہ دونوں بورڈ اس تجویز پر متفق ہوں۔

معلوم ہوا ہے کہ اب جب ہندوستان اور نیوزی لینڈ نے پہلے ہی ورلڈ ٹیسٹ چیمپیئن فائنل میں جگہ بنالی ہے تو زمبابوے کے ساتھ ایڈجسٹمنٹ آسانی سے کی جاسکتی ہے۔ 

پی ایس ایل کے باقی میچوں کے انعقاد کے لئے ، آپ کو کم از کم دو ہفتوں کا وقت درکار ہوگا۔ اگر ہم زمبابوے میں ٹیسٹ سیریز چھوڑ دیں تو 20 میچز کا انعقاد آئی پی ایل کی مصروفیات سے پہلے ہی ممکن ہے۔ 

امکان ہے کہ پی سی بی کے چیئرمین احسان مانی ٹیسٹ سیریز التوا کا معاملہ زیڈ سی کے پاس اٹھائیں گے۔ یہ دونوں بورڈوں پر منحصر ہوگا کہ وہ اس تجویز سے متفق ہوں یا اس سے متفق نہ ہوں۔

 پاکستان نے زیڈ سی کو یقین دہانی کرائی ہے کہ آئندہ ماہ کے لئے شیڈول سیریز کی جگہ ایک مکمل ٹیسٹ سیریز آجائے گی۔ ذرائع نے مزید بتایا کہ محدود اوورز ٹیم کو پہلے جنوبی افریقہ بھیجنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔