پرسنل اٹیک نہیں ہونے چاہیے، بابر اعظم کا عاقب جاوید کو جواب

لوگوں کو ذاتی حملے کرنے سے گریز کرنا چاہیے

پاکستان کے کپتان بابر اعظم نے کہا ہے کہ ٹیم بیرونی رائے پر کوئی توجہ نہیں دیتی لیکن ان کا کہنا ہے کہ لوگوں کو ذاتی حملے کرنے سے گریز کرنا چاہیے۔ بابر اعظم سابق فاسٹ باؤلر عاقب جاوید کی جانب سے ٹی ٹوئنٹی کرکٹ میں کم اسکورنگ ریٹ پر ان پر تنقید کا جواب دے رہے تھے۔ 

عاقب جاوید کی بابر اعظم پر تنقید

ایک انٹرویو کے دوران عاقب جاوید، جو پاکستان سپر لیگ میں لاہور قلندرز کے کوچ ہیں، نے بابر اعظم پر تنقید کرتے ہوئے کہا تھا کہ وہ جس رفتار سے بیٹنگ کرتے ہیں اس کی وجہ سے وہ بابر کو آؤٹ کرنے کی زیادہ کوشش نہیں کرتے۔

یہ بھی پڑھیں |  اٹھائیس اگست کے پاک انڈیا میچ کے بعد انگلینڈ میں فساد

یہ بھی پڑھیں |  محمد حفیظ کی شعیب ملک کو پاکستانی ٹیم میں شامل نا کرنے پر تنقید

عاقب جاوید نے کہا کہ جب ہم کراچی کنگز کے خلاف ہوتے ہیں (پی ایس ایل میں) اور ہمارے پاس کل 180 یا اس سے زیادہ (دفاع کے لیے) ہوتے ہیں، تو ہم نے زیادہ کوشش نہیں کی اور نہ ہی بابر اعظم کو آؤٹ کرنا چاہتے تھے کیونکہ وہ اپنی رفتار اور ضرورت کے مطابق کھیلتے ہیں۔ 

بابر اعظم کا عاقب جاوید کو جواب

 انگلینڈ کی ٹی20 سیریز سے قبل میڈیا سے بات چیت کے دوران، جب بابر اعظم سے ان کے تبصرے کے بارے میں پوچھا گیا، تو وہ ے جواب دینے سے پہلے مسکرائے۔ بابر اعظم نے کہا کہ وہ اس طرح محسوس کر سکتا ہے، یہ ٹھیک ہے. ہر ایک کا اپنا نقطہ نظر ہے۔ آئیے اس وقت پاکستان کرکٹ ٹیم پر توجہ مرکوز رکھیں۔ لوگوں کی اپنی رائے ہے۔ ہم ان پر توجہ نہیں دیتے۔ آپ ان پر بات کر سکتے ہیں لیکن ایک کھلاڑی کے طور پر آپ ایسے مراحل سے گزرے ہیں، جانتے ہیں کہ یہ کتنا مشکل ہے، دباؤ اور ذمہ داری اس میں شامل ہے پھر ذاتی حملے نہ کریں۔ آپ جو چاہیں بحث کریں۔ ہم ان (کی رائے) سے پریشان نہیں ہیں۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔