مصنف کے بارے میں

صفحۂ اول

تبصرے

    پاک فوج کو سیاست میں زبردستی نا گھسیٹا جائے، ڈی جی آئی ایس پی آر

    پاک فوج میڈیا ونگ کے ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل بابر افتخار نے پیر کے روز پی ڈی ایم کی افواہوں کو مسترد کردیا اور کہا کہ فوج کو سیاست میں نہیں گھسیٹنا   چاہئے۔ 

    تفصیلات کے مطابق انہوں نے نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ جو لوگ قیاس آرائیاں کر رہے ہیں ، میں نے ان سے پہلے بھی درخواست کی تھی اور میں انھیں ایک بار پھر کہوں گا کہ سیاست میں فوج کو مت گھسیٹیں۔

     انٹر سروسز پبلک ریلیشنز (آئی ایس پی آر) کے ڈائریکٹر جنرل نے کہا کہ مسلح افواج کے پاس پہلے ہی سیکیورٹی ، داخلی اور بیرونی خطرات کو دیکھنے کی بڑی ذمہ داری ہے۔ 

    یہ بھی پڑھیں | برفانی طوفان کی وجہ سے گلیشیر پھٹ جانے کے بعد 200 ہندوستانی لاپتہ

    انہوں نے کہا کہ اس طرح کی قیاس آرائیاں “بند” کی جانی چاہئیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ اگر کسی کے پاس بیک ڈور رابطوں کے دعوؤں کی حمایت کرنے کا ثبوت ہے تو وہ اسے آگے لائیں۔ میں ایک بار پھر درخواست کروں گا کہ براہ کرم اس گفتگو میں ادارہ کو نہ گھسیٹیں۔ 

    کوویڈ ویکسینز آئی ایس پی آر کے سربراہ نے چین کی پیپلز لبریشن آرمی (پی ایل اے) کے ذریعہ پاک فوج کو ویکسین کی مقدار کے عطیہ کرنے کے بارے میں بھی بات کی۔ انہوں نے کہا کہ فوجی قیادت نے فیصلہ کیا ہے کہ یہ ویکسین ، جس کا مقصد فوج کے جوانوں کو دیا جانا تھا ، جاری قومی ویکسی نیشن مہم میں عطیہ کیا جائے گا تاکہ پاکستان کے فرنٹ لائن ورکرز کو یہ ویکسین دی جاسکے۔

     ویکسینیشن مہم کے پہلے مرحلے میں ، فرنٹ لائن ہیلتھ ورکرز کو یہ ویکسین فراہم کی جارہی ہے۔ میجر جنرل افتخار نے فرنٹ لائن ہیلتھ ورکرز کو قوم کا “حقیقی ہیرو” قرار دیا جن کی انتھک کوششوں اور قربانیوں سے قوم کو اس وبائی مرض کوویڈ19 کا مقابلہ کرنے میں مدد ملی۔

    جاویریہ حارث

    جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔

    سبسکرائب
    کو مطلع کریں
    guest
    0 Comments
    Inline Feedbacks
    View all comments
    0
    آپ اس متعلق کیا کہتے ہیں؟ اپنی رائے کمنٹ کریںx
    ()
    x