پاکستان کے جوہری ہتھیار پاک آرمی کے محفوظ ہاتھوں میں ہیں، شجاعت حسین

ایٹمی ہتھیاروں کو پاک فوج اچھی طرح سے محفوظ رکھے ہوئے ہے

پاکستان مسلم لیگ (ق) کے سربراہ چوہدری شجاعت حسین نے اتوار کے روز کہا ہے کہ ملک کے ایٹمی ہتھیاروں کو پاک فوج اچھی طرح سے محفوظ رکھے ہوئے ہے۔

 مسلم لیگ (ق) کے سربراہ نے اس حوالے سے بائیڈن کے بیان کو ‘بے بنیاد’ قرار دیتے ہوئے امریکی صدر جو بائیڈن پر تنقید کی۔ سابق وزیراعظم چوہدری شجاعت نے کہا کہ 2008 کے عام انتخابات سے قبل موجودہ امریکی صدر [جو بائیڈن] سینیٹر جان کیری اور چک ہیگل کے ساتھ ہمارے گھر لائے اور چوہدری پرویز الٰہی کی تعلیمی پالیسیوں کی تعریف کی۔

یہ بھی پڑھیں | عابد شیر علی نے شکست تسلیم کر لی

یہ بھی پڑھیں | عمران خان کی پی ٹی آئی سینئیر لیڈر شپ کے ساتھ میٹنگ

پاکستان کے ایٹمی پروگرام کو بحث میں لانے کی کوئی منطق نہیں

انہوں نے [بائیڈن اور ان کے معاونین] نے ایک انٹرویو میں اس بات کا اعادہ کیا تھا جس پر پرویز الٰہی نے ان سے پوچھا کہ اگر ان کی انتخابی مہم میں ایسا کچھ کہا گیا تو ان کا ردعمل کیا ہوگا، اس پر امریکی سینیٹر نے موضوع بدل دیا اور پنجاب کی صحت اور شعبہ تعلیم کی تعریف شروع کردی۔ 

 جوہری ہتھیاروں کے بارے میں مزید بات کرتے ہوئے، چوہدری شجاعت نے کہا کہ ہمارے جوہری پروگرام کو 220 ملین لوگوں نے سپورٹ کیا ہے۔ پاکستان نے جب سے اپنا جوہری پروگرام شروع کیا ہے، کبھی بھی غیر ذمہ دارانہ رویہ نہیں اپنایا ہے۔ ہمارے ایٹمی ہتھیار بھارت اور دیگر ممالک سے زیادہ محفوظ ہیں۔ پاکستان کے ایٹمی پروگرام کو بحث میں لانے کی کوئی منطق نہیں ہے۔

حرمین رضا

حرمین رضا اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔