مصنف کے بارے میں

صفحۂ اول

تبصرے

    پاکستان کی کشمیر سے اظہار یکجہتی، عام تعطیل

    آج بروز جمعہ پاکستان بھر میں عام تعطیل کے ساتھ یوم یکجہتی کشمیر منایا جارہا ہے جس کے تحت ملک بھر میں عوامی جلسوں کا انعقاد کیا جارہا ہے تاکہ اقوام متحدہ کی قرار دادوں کے تحت کشمیری عوام کی حق خود ارادیت کی جدوجہد کے لئے پاکستانی قوم کی جانب سے بھرپور حمایت کا اظہار کیا جاسکے۔

     اس موقع پر وزیر اعظم عمران خان آزاد جموں و کشمیر کے کوٹلی میں ایک عوامی اجتماع سے خطاب کریں گے۔ قبل ازیں صدر مملکت عارف علوی نے مظفر آباد میں آزاد جموں وکشمیر قانون ساز اسمبلی کے اجلاس سے بھی خطاب کیا۔ انہوں نے ازاد کشمیر کے وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر اور آزاد جموں و کشمیر کے صدر سردار مسعود خان کے ہمراہ یکجہتی مارچ کی بھی قیادت کی۔

     کشمیریوں سے خطاب کرتے ہوئے ، انہوں نے انھیں خود ارادیت کی جدوجہد میں پاکستانی قوم کی حمایت کی یقین دہانی کرائی۔ انہوں نے کہا کہ ہم سمجھتے ہیں کہ آپ ظلم و ستم کا شکار ہیں اور مشکلات کا سامنا کر رہے ہیں۔ آپ کامیاب ہوں گے کیونکہ آپ سچ کے ساتھ ہیں۔ وزیر خارجہ نے کہا کہ ہندوستان نے ہمیشہ لوگوں کی ہمت کو توڑنے کی کوشش کی ہے لیکن وہ کشمیریوں پر مظالم کی کوششوں میں ناکام ہوجائے گا۔

    وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے دیگر صوبائی وزراء اور سرکاری عہدیداروں کے ساتھ کراچی میں منعقدہ یکجہتی واک میں بھی شرکت کی۔ واک عوامی سیکرٹریٹ سے شروع ہوئی اور مزار جناح پر اختتام پذیر ہوگی۔

    یہ بھی پڑھیں | سعودی عرب اور امارات کا پاکستان پہ دو بلین ڈالر برقرار ہے

     وزیر اعلیٰ سندھ نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی ظلم و بربریت کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ دنیا کے ضمیر کو بیدار ہونا چاہئے۔ انہوں نے سی ایم ہاؤس کے حوالے سے کہا کہ بھارت نے کشمیر میں دنیا کا سب سے طویل کرفیو نافذ کردیا ہے۔ 

    کوئٹہ میں یوم یکجہتی کشمیر منانے کے لئے باضابطہ تقریب بلوچستان اسمبلی میں منعقد ہوا ، جس میں وزیر اعلی جام کمال اور دیگر صوبائی قانون سازوں نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سی ایم کمال نے کہا کہ پاکستانی حکومت کشمیریوں کے لئے ہر فورم پر آواز بلند کرتی رہے گی۔

     انہوں نے کہا کہ بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی ٹرمپ کی طرح ہے۔ جسے اس کی منفی پالیسیوں کی وجہ سے مسترد کردیا گیا۔

     پشاور میں ، خیبرپختونخوا کے وزیر اعلی محمود خان نے سی ایم ہاؤس سے گورنر ہاؤس تک مارچ کی قیادت کی۔ واک میں صوبائی قانون سازوں اور دیگر عہدیداروں نے بھی شرکت کی۔ گلگت بلتستان میں بھی ریلیاں اور اجتماعات ہوئے ، جہاں سرکاری عہدیداروں نے عوام سے خطاب کیا۔ قانون دان عبید اللہ بیگ نے اتحاد چوک پر جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ گلگت کی عوام ہمیشہ کشمیریوں کے ساتھ کھڑے ہوئے ہیں۔ انہوں نے مقبوضہ خطے میں بھارتی ظلم و بربریت کے خاتمے کا مطالبہ بھی کیا۔ 

    مزید برآں وزیر اعظم عمران خان اور صدر عارف علوی نے آج اپنے پیغامات میں مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کے ظلم و ستم کی مذمت کی اور عالمی برادری سے مطالبہ کیا کہ وہ اس بات کو یقینی بنانے میں اپنا کردار ادا کریں کہ خطے کے لوگوں کو حق خودارادیت حاصل ہو۔

    جاویریہ حارث

    جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔

    سبسکرائب
    کو مطلع کریں
    guest
    0 Comments
    Inline Feedbacks
    View all comments
    0
    آپ اس متعلق کیا کہتے ہیں؟ اپنی رائے کمنٹ کریںx
    ()
    x