وزیر اعظم عمران خان کا سیکورٹی فورسز کو بلوچستان میں دہشتگردانہ حملے روکنے پر خراج تحسین

آج بروز جمعرات فوج کے میڈیا ونگ نے بتایا کہ سیکیورٹی فورسز نے بلوچستان کے پنجگور اور نوشکی کے علاقوں میں گزشتہ رات مختلف حملوں کو کامیابی سے روکنے  کے بعد 13 دہشت گردوں کو ہلاک کر دیا ہے۔

 ایک بیان میں، انٹر سروسز پبلک ریلیشنز (آئی ایس پی آر) نے کہا کہ حملوں کو روکنے کے بعد، سیکیورٹی فورسز نے علاقے میں چھپے دہشت گردوں کی تلاش کے لیے کلیئرنس آپریشن کیا۔

آئی ایس پی آر کا کہنا تھا کہ نوشکی میں سیکیورٹی فورسز نے مقابلہ کرکے مزید 5 دہشت گردوں کو ہلاک کردیا جس سے ہلاکتوں کی کل تعداد نو ہوگئی۔

 آئی ایس پی آر نے مزید کہا کہ حملے کو پسپا کرتے ہوئے ایک افسر سمیت 4 جوانوں نے جام شہادت نوش کیا ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ دریں اثنا، پنجگور میں، اب تک چار دہشت گرد مارے جا چکے ہیں جبکہ کم از کم چار سے پانچ کو سکیورٹی فورسز نے گھیرے میں لے رکھا ہے۔ 

آئی ایس پی آر نے کہا کہ فرار ہونے والے دہشت گردوں کے خاتمے کے لیے پنجگور میں آپریشن جاری ہے۔ 

بیان میں مزید کہا گیا کہ ابتدائی تحقیقات کے مطابق، انٹیلی جنس ایجنسیوں نے افغانستان اور ہندوستان میں دہشت گردوں اور ان کے ہینڈلرز کے درمیان رابطے کو روکا ہے۔

یہ بھی پڑھیں | مہنگائی دو سال کی بلند ترین شرح پر پہنچ گئی

 وزیر اعظم عمران خان کا سیکیورٹی فورسز کو خراج تحسین

 وزیر اعظم عمران خان نے جمعرات کو بلوچستان میں گزشتہ رات دہشت گردانہ حملوں کو روکنے پر بہادر سیکیورٹی فورسز کو خراج تحسین پیش کی اور ان کی “عظیم قربانیوں” کا اعتراف کیا۔ 

 انٹر سروسز پبلک ریلیشنز (آئی ایس پی آر) کے مطابق، بدھ کی شام دیر گئے دو الگ الگ حملوں میں دہشت گردوں نے بلوچستان کے پنجگور اور نوشکی میں سیکیورٹی فورسز کے کیمپوں پر حملہ کرنے کی کوشش کی۔ دہشت گردوں کو بھاری نقصان پہنچاتے ہوئے حملوں کو کامیابی سے روک دیا گیا تھا جبکہ پنجگور کے واقعے میں ایک سپاہی شہید ہوا تھا۔ 

 وزیر اعظم نے آج کہا کہ ہم اپنی بہادر سیکورٹی فورسز کو سلام پیش کرتے ہیں جنہوں نے پنجگور اور نوشکی، بلوچستان میں سیکورٹی فورسز کے کیمپوں پر دہشت گردانہ حملوں کو ناکام بنایا۔ قوم ہماری سیکورٹی فورسز کے ساتھ متحد ہے جو ہماری حفاظت کے لئے عظیم قربانیاں دیتے رہتے ہیں۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔