مصنف کے بارے میں

صفحۂ اول

موٹروے زیادتی کیس کا مرکزی ملزم عابد فیصل آباد سے گرفتار

آخرکار ایک ماہ بعد موٹر وے عصمت دری کیس  کے مرکزی ملزم عابد ملہی کو فیصل آباد سے گرفتار کر لیا گیا ہے۔  پولیس نے بتایا کہ عابد کو فیصل آباد سے لاہور لایا گیا ہے جہاں اس کا ڈی این اے ٹیسٹ کیا جائے گا۔

دوسرا مشتبہ شخص جس نے مبینہ طور پر اس عورت کے ساتھ زیادتی کی تھی ، شفقت جوڈیشل ریمانڈ پر جیل میں ہے۔ انٹیلیجنس بیورو (آئی بی) ، پولیس اور دیگر اداروں کی اسپیشل برانچ نے ملزم کا پتہ لگانے کے بعد اس کو پکڑنے فیصل آباد جانے سے قبل ملی اطلاع متعلق پنجاب پولیس کو آگاہ کیا تھا۔ 

یاد رہے کہ موٹر وے عصمت دری کیس کا مرکزی ملزم چار بار پنجاب پولیس کے چنگل سے فرار ہوکر گرفتاری سے بچنے میں کامیاب ہو چکا تھا۔

 پولیس نے موٹر وے زیادتی کیس کے ملزم کو کس طرح پکڑا؟

 ذرائع نے نجی نیوز کو بتایا کہ موٹر وے زیادتی کے ملزم کے لئے ایک جال بچھادیا گیا تھا جو بالآخر اس کی گرفتاری کا سبب بنا۔ ذرائع نے نجی نیوز کو بتایا کہ عابد کی اہلیہ کو ملزم نے فون کال کے دوران بتایا کہ وہ اس سے فیصل آباد ملے گا۔ جب عابد اس سے ملنے شہر پہنچا تو پولیس اہلکاروں نے اسے سادہ لباس میں پکڑ لیا۔ نجی نیوز کے نمائندے کے مطابق ، ملزم کو بغیر کسی مزاحمت کے گرفتار کیا گیا ہے۔ اسے آسانی سے پکڑ کر فیصل آباد سے لاہور لے جایا گیا۔

 نجی نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر اطلاعات پنجاب فیاض چوہان نے کہا کہ موٹر وے زیادتی کیس کے ملزم سے نمٹنے کے لئے صوبائی حکومت اپنی طاقت کا ہر ممکن استعمال کرے گی۔ اس بارے میں گفتگو کرتے ہوئے کہ پنجاب حکومت عابد پر مقدمہ چلائے کیونکہ وہ عصمت دری کے الزامات کے باوجود اس سے قبل ضمانت حاصل کرنے میں کامیاب رہا ہے۔ فیاض چوہان نے کہا کہ موٹر وے زیادری کا شکار لڑکی سے بات کیے بغیر ، پنجاب حکومت 72 گھنٹوں میں ملزمان کی شناخت کرنے میں کامیاب ہوگئی ہے۔ 

 انہوں نے مزید بتایا کہ عابد متعلق میڈیا میں تفصیلا خبروں کی وجہ سے وہ پولیس کے چنگل سے فرار ہونے میں کامیاب ہوگیا تھا۔ وزیر اطلاعات نے بتایا کہ اس معاملے کے بارے میں میڈیا کے اثر و رسوخ کی وجہ سے ، ملزم پولیس کے بارے میں اطلاعات موصول کرنے میں کامیاب رہا اور وہ پولیس سے متعلق اپنے ذرائع سے معلومات حاصل کرنے کے لئے چار سے پانچ بار پولیس چھاپوں سے فرار ہونے میں کامیاب ہوگیا۔

واضح رہے کہ وزیر اعظم عمران خان زیادتی کیس کے مجرمان کو نامرد کرنے کے حق میں ہیں تاہم ملزم متعلق حکومت کی آئیندہ کی حکمت عملی کیا ہو گی اس پر کچھ کہنا قبل از وقت ہو گا۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔