محمد حفیظ کی پاکستان کرکٹ بورڈ پر تنقید، وجہ کیا بنی؟

شاہ آفریدی کی انجری

محمد حفیظ نے شاہین شاہ آفریدی کی انجری سے نمٹنے کے لیے پاکستان کرکٹ بورڈ پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ بورڈ نے انہیں بحالی کے عمل کے لیے لندن بھیجنے کے فیصلے میں تاخیر کرکے وقت ضائع کیا ہے۔

 شاہین شاہ آفریدی سری لنکا کے دورے کے دوران زخمی ہو گئے تھے اور انہیں جاری ایشیا کپ 2022 سے باہر بیٹھنا پڑا۔ 22 سالہ کھلاڑی اسکواڈ کے ساتھ لندن سفر کر رہے ہیں اور حال ہی میں انکشاف ہوا ہے کہ وہ اپنی بحالی کا عمل مکمل کر رہے ہیں۔ 

 پی سی بی کے بیان میں چیف میڈیکل آفیسر ڈاکٹر نجیب اللہ سومرو نے کہا کہ آفریدی کو بلاتعطل، سرشار گھٹنوں کے ماہر کی دیکھ بھال کی ضرورت ہوگی۔

یہ بھی پڑھیں | پی سی بی کی جانب سے نسیم شاہ کے زخم سے متعلق اہم اپ ڈیٹ

یہ بھی پڑھیں | پاکستان کو میچ کون جتوا سکتا ہے؟ شعیب اختر نے بتا دیا 

ٹویٹر پر جاتے ہوئے حفیظ نے ایک ویڈیو شیئر کی جس میں انہوں نے آفریدی کے ساتھ پی سی بی کے سلوک پر تنقید کی۔

محمد حفیظ نے کہا کہ 22 سالہ کھلاڑی کو صحیح طریقے سے دیکھ بھال کرنا ہوگی اور کہا کہ بورڈ نے صرف ان کے زخمی ہونے کے بعد وقت ضائع کیا۔

 پی سی بی نے کہا تھا کہ کھلاڑی کے بہترین مفاد میں، ہم نے اسے وہاں بھیجنے کا فیصلہ کیا ہے۔ میڈیکل ڈپارٹمنٹ لندن میں اس کی پیشرفت کے بارے میں روزانہ فیڈ بیک حاصل کرے گا اور ہمیں یقین ہے کہ شاہین آئی سی سی مینز ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ سے قبل مکمل فٹنس پر واپس آجائیں گے۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔