تنگدستی کی وجہ سے کرکٹ چھوڑنے کا فیصلہ کر لیا تھا، ذیشان ضمیر کا انکشاف

اے سی سی انڈر 19 ایشیا کپ میں سب سے زیادہ وکٹیں لینے والے ذیشان ضمیر نے پی سی بی پاتھ ویز پروگرام کا حصہ بننے کے لیے بہت سے چیلنجز اور مشکلات کو عبور کیا جس کا انہوں نے ذکر کیا ہے۔ 

اپنی والدہ کی دیکھ بھال میں مدد کے لیے کرکٹ چھوڑ کر اپنے آبائی صوبے خیبرپختونخوا واپس آیا کرتے

ذیشان کراچی، پاکستان میں رہتا ہے۔ ذیشان ضمیر کا کہنا ہے کہ وہ اپنی والدہ کی دیکھ بھال میں مدد کے لیے کرکٹ چھوڑ کر اپنے آبائی صوبے خیبرپختونخوا واپس آیا کرتے تھے لیکن مقامی کوچ نے انہیں مالی مدد کے ساتھ کرکٹ کھیلنے کو جاری رکھنے کو کہا۔ فاسٹ بولر کے والد کراچی کی ایک نجی کمپنی میں ڈرائیور ہیں۔بی پاتھ ویز پروگرام غیر ملکی کوچز کی نگرانی میں باصلاحیت نوجوان کھلاڑیوں کو مالی اور تربیتی معاونت فراہم کرے گا۔ کچھ ایسے تھے جنہوں نے ان کی حوصلہ شکنی کی لیکن وہ ثابت قدم رہے اور بالآخر پی سی بی پاتھ ویز پروگرام کا حصہ بن گئے۔

یہ بھی پڑھیں | بابر اعظم کو غلاف کعبہ کی تیاری میں شامل ہونے کا اعزاز مل گیا 

یہ بھی پڑھیں | عید 2022: مہمانوں کو پیش کرنے کے لئے تین مشروب 

پی سی بی پاتھ ویز پروگرام ایک مکمل پیکج ہے جس سے باصلاحیت کھلاڑیوں کو آرام سے کرکٹ پر توجہ مرکوز رکھنے میں مدد ملے گی۔ ذیشان ضمیر نے اپنی تباہ کن باؤلنگ کی بدولت گزشتہ سال دبئی میں ہونے والے انڈر 19 اے ایف سی ایشین کپ میں تین میچ جیتے تھے، انھوں نے انڈیا انڈر 19 کے خلاف میچ میں 5 سمیت 11 وکٹیں حاصل کی تھیں۔ انہوں نے آئی سی سی انڈر 19 ورلڈ کپ 2022 کے 5 میچوں میں 5 وکٹیں حاصل کیں۔

اس سال پہلی بار اسلام آباد یونائیٹڈ کے فاسٹ باؤلر دوسرے میچ میں انجری کے باعث ٹورنامنٹ سے باہر ہوئے۔ تاہم ٹورنامنٹ میں ان کا واحد شکار پاکستان کے کپتان بابر اعظم تھے۔

انہوں نے بتایا کہ پاتھ ویز پروگرام سے پہلے تنگدستی کے باعث انہوں نے ایک دفعہ کرکٹ چھوڑنے کا فیصلہ کر لیا تھا۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔

ہمارا نیوز لیٹر جوائن کریں
تازہ ترین آرٹیکلز، نوکریوں اور تفریحی خبریں ڈائریکٹ اپنے انباکس میں حاصل کریں
یہاں ایک لاکھ ستر ہزار سبسکرائبرز ہیں