بسمہ معروف کا ٹیماٹیز کے ساتھ عجیب رویہ بےنقاب

ویمنز ورلڈ کپ 2022 میں پاکستان کی جیت کے بغیر مہم کے بعد معروف صحافی شعیب جٹ نے ٹیم میں دراڑ کی طرف اشارہ کیا ہے۔

 سپورٹس جرنلسٹ نے رپورٹ کیا کہ کپتان بسمہ معروف نے میگا ایونٹ میں مجموعی طور پر قابل رحم کارکردگی کے بعد ٹیم کے ساتھیوں پر عجیب اور سخت تبصرے کیے ہیں۔ 

 شعیب جٹ نے اپنے ٹویٹر پر خواتین کرکٹ ٹیم کی کپتان کی جانب سے ورلڈ کپ میں کھلاڑیوں کی کارکردگی پر مبینہ طور پر کیے گئے منفی تبصروں کو شیئر کیا۔ بسمہ معروف نے مبینہ طور پر بڑے ایونٹ میں انفرادی پرفارمنس پر کھلاڑیوں کی توہین کی ہے۔ 

 ابھرتے ہوئے اسٹار اور گزشتہ سال ون ڈے میں مشترکہ طور پر سب سے زیادہ وکٹیں لینے والے کھلاڑی پر تنقید کرتے ہوئے کپتان نے فاطمہ ثناء کے بیٹنگ اسٹائل کو تنقید کا نشانہ بنایا۔ نوجوان کھلاڑی نے ویمنز ورلڈ کپ میں ساتویں نمبر پر بیٹنگ کرتے ہوئے 4 میچوں میں 40 رنز بنائے جب کہ انہوں نے 35.80 کی اوسط اور 5.26 کی اکانومی سے 5 وکٹیں حاصل کیں۔ 

یہ بھی پڑھیں | شہباز شریف کی حکودس لاکھ چھوڑو صرف 172 پارلیمانی ممبران پورے کر لو، عمران خان کو بلاول بھٹو کا طنز   

ندا ڈار پاکستانی اسکواڈ میں سب سے زیادہ تجربہ کار کھلاڑیوں میں سے ایک ہیں اور بلاشبہ ٹیم کی بہترین آل راؤنڈر ہیں۔ تاہم کپتان بسمہ معروف ورلڈ کپ میں اپنی کارکردگی سے خوش نہیں ہیں۔ بسمہ معروف نے مبینہ طور پر خود کو ’سپر اسٹار‘ سمجھنے پر ندا ڈار کو پکارا ہے۔ 

 بسمہ معروف نے ناہیدہ خان پر خود غرض کرکٹ کھیلنے اور ٹیم کی جیت کے لیے اپنا بہترین نہ دینے کا الزام بھی لگایا۔ اوپنر ناہیدہ خان نے بنگلہ دیش کے خلاف 43 رنز بنائے تھے۔

 شعیب جٹ نے یہ بھی بتایا کہ کپتان نے نہ صرف اپنے ساتھی کھلاڑیوں پر طنز کیا بلکہ غصے میں اس کی نظر میں موجود چیزیں بھی پھینک دیں۔ اطلاعات کے مطابق سینئر کھلاڑیوں نے کپتان کے غیر مہذب رویے اور جذبے کی کمی پر برہمی کا اظہار کیا ہے۔ 

 بسمہ معروف نے طویل زچگی کی چھٹی کے بعد دوبارہ ورلڈ کپ کے لیے ٹیم جوائن کر لی۔ بسمہ نے ورلڈ کپ کے 4 میچوں میں 41.33 کی اوسط اور 63.26 کے اسٹرائیک ریٹ سے 124 رنز بنائے ہیں۔ تاہم، پاکستان نے اب سیمی فائنل میں جگہ بنانے کے امکانات کھو دیے ہیں کیونکہ وہ پوائنٹس ٹیبل پر سب سے نیچے ہیں۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔