امریکی صدر جوبائیڈن نے حلف اٹھاتے ہی مسلمانوں پر عائد پابندی ختم کر دی

بدھ کے روز اپنے عہدے کا حلف اٹھانے کے بعد اپنے پہلے حکم میں ، امریکی صدر جو بائیڈن نے اپنے پیش رو ڈونلڈ ٹرمپ کے ذریعہ رکھی گئی کچھ مسلمان اور افریقی ممالک پر سفری پابندی ختم کردی۔ 

تفصیلات کے مطابق بائیڈن بدھ کی سہ پہر کی تقریب حلف برداری کے بعد وائٹ ہاؤس واپس آئے جہاں انہوں نے ارلنگٹن میں نامعلوم فوجی کی قبر پر پھول چڑھائے اور پریڈ کا معائنہ کیا۔ اور فورا  ہی اس نے ان احکامات پر دستخط کرنا شروع کردئے جن سے ٹرمپ کے ردعمل کو ختم کیا جا سکے اور ماحولیاتی ایجنڈے اور امیگریشن مخالف پالیسوں کو پلٹ دے۔ انہوں نے امریکی معیشت کو فروغ دینے اور ملک بھر میں نسلی اور مذہبی تنوع کو فروغ دینے کے اقدامات بھی کیے۔

جو بائیڈن نے اوول آفس سے 17 ایگزیکٹو آرڈرز ، یادداشتوں اور اعلانات پر دستخط کیے ، جن میں پیرس موسمیاتی معاہدے میں دوبارہ شامل ہونے اور مسلم  ممالک پر عائد سفری پابندی کو ختم کرنے کے احکامات بھی شامل ہیں۔ امریکی صدر نے ایک ٹویٹ میں واضح الفاظ میں کہا کہ ہم پیرس کے موسمیاتی معاہدے میں واپس آ گئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں | جنرل اکبر پاکستان کی طرف سے سعودی عرب کے نئے سفیر مقرر

دریں اثنا  جیف زینٹس نے کہا کہ امریکہ بھی اپنے پیشرو کے فیصلے کو مسترد کرتے ہوئے عالمی ادارہ صحت میں دوبارہ شامل ہوجائے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ اعلی امریکی ماہر انتھونی فوکی جمعرات کو ڈبلیو ایچ او کے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں ایک وفد کی قیادت کریں گے۔ اگرچہ ان کی میراث کو ختم کرنے کی کوششوں سے ٹرمپ کو تکلیف پہنچ سکتی ہے ، لیکن یہ بغاوت 22 سالہ شاعر ، امندا گورمین کی جانب سے سامنے آئی ہے ، جس کے الفاظ نے دنیا بھر کے لاکھوں دلوں میں ایک بہتر مستقبل کی امید کو دوبالا کردیا ہے۔

 ہم نے ایک ایسی طاقت دیکھی ہے جو ہماری قوم کو بانٹنے کی بجائے اسے خراب کر دے گی ، اگر اس کا مطلب جمہوریت میں تاخیر کرنا ہوتا ہے ، اور یہ کوشش قریب قریب کامیاب ہوگئی۔ لیکن اگرچہ جمہوریت کو وقتاically فوقتا delayed تاخیر کی جاسکتی ہے ، لیکن اسے کبھی بھی مستقل طور پر شکست نہیں دی جاسکتی ہے ، “گورمین نے 6 جنوری کو امریکی دارالحکومت پر ہجوم کے حملے کا ذکر کرتے ہوئے کہا۔

اس دوران نئے امریکی صدر اپنے پیٹے کو یاد کر کے رو دئیے اور کہا کہ اگر وہ ہمارے درمیان ہوتے تو آج ہم ان ما تعارف صدر کے طور پر کرواتے-

جاویریہ حارث

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔