مصنف کے بارے میں

صفحۂ اول

مینار پاکستان پر ایک اور خاتون کو ہراساں کرنے کی ویڈیو وائرل

لاہور یوم آزادی کے موقع پر گریٹر اقبال پارک میں ٹک ٹاکر عائشہ بیگ کو ہراساں کرنے کا معاملہ تو آپ جانتے ہوں گے جبکہ ایک اور خاتون کا بھی معاملہ سامنے آیا ہے جس کو  اسی طرح کی صورتحال کا سامنا کرنا پڑا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ایک اور واقعے کی ویڈیو بھی منظر عام پر آگئی ہے۔ سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ایک نئی ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ مینار پاکستان، لاہور کے گریٹر اقبال پارک میں ایک خاتون کو چند اوباش نوجوانوں نے گھیرے میں لے رکھا یے جبکہ اس خاتون نے گود میں بچہ اٹھا رکھا ہے اور اس کی فیملی بھی اس کے ساتھ ہے۔

ویڈیو کے مطابق چند اوباش نوجوانوں نے فیملی کو اپنے گھیرے میں لے کر انہیں ہراساں کرنے کی کوشش کی جبکہ اسی دوران فیملی میں موجود ایک لڑکی نے بہادری کا مظاہرہ کیا اور ہاتھ میں پکڑے قومی پرچم کے ڈنڈے سے لڑکوں کو ہٹانے کی کوشش کی جس پر لڑکے ڈر کر سائڈ پر ہو گئے۔

یہ بھی پڑھیں | لاہور: ایک عورت کو مبینہ طور پر ہراساں کرنے کے لیے 400 افراد کے خلاف ایک کیس درج کیا گیا ہے

فیملی کی لڑکی کی جانب سے لڑکوں کو ہٹانے کی کوشش کے بعد گریٹر اقبال پارک میں تعینات ایک سیکیورٹی اہلکار نے موقع پر پہنچ کر فیملی کو بچایا جبکہ فیملی کو تنگ کرنے والے لڑکے وہاں سے بھاگ گئے۔

واضح رہے کہ  یہ ویڈیو  ٹک ٹاکر خاتون کو چار سو سے زائد افراد کے ہراساں کیے جانے کے معاملے کے بعد سامنے آئی ہے۔

حرمین رضا

جاویریہ حارث اردو خبر میں پاکستان میں مقیم مصنف اور سابق ایڈیٹر ہیں۔